in

فیسوں میں اضافے کے خلاف نئے پاکستان میں طلبا کا پر امن احتجاج جرم بن گیا ،

فیسوں میں اضافے کے خلاف نئے پاکستان میں طلبا کا پر امن احتجاج جرم بن گیا ،پشاور یونیورسٹی میں طلبہ فیسوں میں خلاف احتجاج کر رہے تھے کہ پولیس نے ان پر لاٹھی چارج کر دیا جس کے نتیجے میں متعدد طلبہ زخمی ہو گئے اور پولیس نے کچھ طلبہ کو گرفتار بھی کر لیا

تفصیلات کے مطابق فیسوں میں اضافے کے خلاف ایم فل اور پی ایچ ڈی کے سٹوڈنٹس فسسوں میں اضافے کے خلاف اپنا احتجاج انتظامیہ کو ریکارڈ کروا رہے تھے کہ اچانک ان پر پولیس نے لاٹھی چارج شروع کر کے گرفتاریاں عمل میں لانی شروع کر دیں دوسری جانب یونیورسٹی انتطامیہ کا کہنا ہے کہ احتجاج کرنے والے طلبا کو وی سی آفس کی جانب سے روکا گیا

لیکن انہوں نے احتجاج اور اپنی نعرے بازی جاری رکھی۔وزیراطلاعات خیبرپختونخواہ شوکت یوسفزئی کا کہنا تھا کہ میں خود سٹوڈنٹ لیڈر رہا ہوں لیکن کسی کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں ملے گی اور سب کے خلاف کاروائی ہو گی

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری کی مشکلات میں اضافہ بیٹے کی گرفتاری کے بعد سمدھی نے بھی ہتھیار ڈال دے

حکومت کا بچت سکیموں کی شرح منافع میں حیران کن حد تک اضافہ ریٹائرڈ ملازمین، پنشنرز اور بیواؤں میں خوشی کی لہر دوڑ گئی