in

پاکستان کو مورد الزام ٹھہرانا درست نہیں، امن کے لیے مسئلہ کشمیر کاحل ضروری شاہ محمود قریشی کا امریکی حکام کو دو ٹوک پیغام

افغان جنگ خطے کا بہت اہم مسلہ ہے اور خطے میں امن کے لئے یہ بہت ضروری ہے کہ اس مسلہ کو مذاکرات کے ذریعے فوری طور پر حل کیا جائے جس کے لئے پاکستان نے ہمیشہ سنجیدگی سے اور مذاکرات کے ذریعے اس کو حل کرنے کی کوشش کی ہے

لیکن کچھ شرپسند عناصر اس کو ہوا دینے کی کوشش کر رہے ہیں اور نہیں چاہتے کہ خطے میں امن قائم ہو لیکن اسی سلسلے میں پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی امریکی ہممنصب سے ملاقات ہوئی- تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے امریکی ہم منصب سے ملاقات کی

جس میں اس بات پر اتفاق ہوا کہ اب اس مسئلے کو حل کرنے کا وقت آگیا ہے انہوں نے مزید کہا کہ افغانستان کی اس صورتحال پر پاکستان کو ذمے دار ٹھہرانا ٹھیک نہیں اور جب تک کشمیر کا مسلہ حل نہیں ہوتا تب بھی خطے میں امن قائم نہیں ہو سکتا اس سے قبل پاکستان کے دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر محمد فیصل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا

کہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے امریکی کی سلامتی امور کے مشیر جان بولٹن سے بھی ملاقات کی جس میں دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا. پاکستان ٹیلی ویژن کے مطابق شاہ محمود قریشی نے جان بولٹن سے کہا کہ افغان مسئلے کا کوئی عسکری حل نہیں ہے.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

تھر ‘‘ کی صورتحال پر وزیراعظم عمران خان کا اظہار تشویش،صحر ا ے تھر کے باسیوں کے لئے بڑا حکم جاری کر دیا

پاکستان کے پانی کے ذخائر میں خطرناک حد تک کمی.صورتحال مزید بگڑنے کا خدشہ