in

کالج ہاسٹل میں لڑکی کی ہلاکت کا معمہ حل پولیس کی جانب سے حتمی رپورٹ سامنے آ گئی

راولپنڈی ہوسٹل میں طلبہ کی موت کے سلسے میں چلنے والے احتجاج کا ڈروپ سین ہو گیا
میڈیکل روپورٹ آنے کے بعد پولیس نے بہت کلئیر واضیح کر دی کہ طالبہ کے جسم پر کسی قسم کا تشدد کا نشان نہیں ملا اور نہ کوئی زہریلی چیز ملی ہے

والدین کے مطابق عروج شروع سے ہی دل کی مریظہ تھی اور والدین بھی اس بات کو تسلیم کر چکے ہیں اور نہ کسی کے خلاف والدین نے کوئی درجواست جمع کروائی
رپورٹ کے مطابق عروج رات کو اپنے کالج کے کام میں مصروف تھی اور صبح اس کے دیر تک نہ اٹھنے پر وارڈن کو اطلاع کی گئی جس پر پرنسپل کو موت کی خبر دی گئی
بعد ازا کچھ ٹیچر کی وجہ سے طلبہ کو احتجاج کا راستہ اختیار کرنے کی طرف راغب کیا گیا اور فضول افواہیں ارائیں گئی”

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

ہمت و عوامی خدمات کا جذبہ برقرار .عمران خان نے پاکستانی عوام کو بڑی خوشخبری سنا دی

گندگی کا نیا ریکارڈ قائم ,پی آئی اے ایئرہوسٹس ہاسٹل کا کچن چوہوں اور بلیوں کی آماجگاہ بن گیا