in

عجب کرپشن کی غضبناک داستان ،شہباز شریف کا بھی کچا چٹھا کھل گیا، ڈیڑھ لاکھ کا کنسلٹنٹ ڈیڑھ ارب روپے میں ہائر، 10لاکھ کا فلٹرکتنے کروڑ روپےمیں لگایا جاتا رہا؟ پنجاب میں بہنے والی دودھ اور شہد کی نہریں سامنے آگئیں

جب سے پاکستان میں نئی حکومت نے اقتدار سمبھالا ہے احتساب کا نعرہ لگایا ہے اور احتساب کے اس عمل کو تیزی سے جاری رکھنے کی طرف رواں دواں ہے جس پر نیب سے بھی پوری مدد لی جا رہی ہے اور دیگر اداروں کی مدد بھی حاصل کی جا رہی ہے-

اکثر سیاستدان اپنی کرپشن کی کمائی کو بیرون ملک میں رکھتے ہیں اور کسی کو ظاہر نہیں ہونے دیتے اسی معاملے میں نیب نے کل 11بجے شہباز شریف کو طلب کر لیا- تفصیلات کے مطابق معروف صحافی چودھری غلام حسین نے انکشاف کیا ہے کہ سابق وزیر اعلی شہباز شریف کے دور میں صاف پانی سکینڈل میں اربوں روپے دے کر کنسلٹنٹ رکھے گئے تھے

جن پر اربوں روپے خرچ کر دیا وہ کام پچاس ہزار یا لکھ روپے میں ہو جانا تھا ان کا مزید کہنا تھا کہ پتا لگائیں کہ یہ رقم کہاں ہے اور کسے بانٹی ہے چوہدری غلام حسین نے اس موقع پر کہا کہ چکوال ایک پہاڑی علاقہ ہے، کونسا کنسلٹنٹ چاہئے جو یہ بتائے کہ صاف پانی کیلئے پلانٹس کس کس جگہ لگنا چاہئے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

مثا لیں دینا آسان عمل کرنا مشکل آپ بڑی یورپ کی مثالیں دیتے تھے شکر کریں خاور مانیکا بچ گیا اگر یہ یورپ کی پولیس ہوتی تو رئوف کلاسرا نے وزیراعظم عمران خان کو کھری کھری سنا دیں

سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری کی مشکلات میں اضافہ بیٹے کی گرفتاری کے بعد سمدھی نے بھی ہتھیار ڈال دے